دبئی: پہلے ایٹمی پاور پلانٹ نے کمرشل بنیادوں پر کام شروع کر دیا

[ad_1]

دبئی: متحدہ عرب امارات کے پہلے ایٹمی پاور پلانٹ نے کمرشل بنیادوں پر کام شروع کر دیا ہے۔

امریکہ کے ایٹمی پروگرام پر سائبر حملہ

خلیج کے مؤقر انگریزی اخبار کے مطابق اس بات کا اعلان یو اے ای کے نائب صدر اوروزیراعظم   شیخ محمد بن راشد آل مکتوم نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ’ٹوئٹر‘ پر کیا ہے۔ انہوں نے اپنے ٹوئٹ کے ساتھ تصویر بھی شیئر کی ہے۔

شیخ محمد بن راشد نے اپنے ٹوئٹ پیغام میں لکھا ہے کہ عرب دنیا کے پہلے ایٹمی پاور پلانٹ سے پہلا میگا واٹ نیشنل گرڈ میں شامل کر لیا گیا۔

شیخ محمد بن راشد آل مکتوم کے مطابق پلانٹ دو ہزار نوجوان اماراتی انجینئرز کی 80 بین الاقوامی پارٹنرز کے ساتھ شراکت میں دس سال کی کاوش کا نتیجہ ہے۔

بھارت بحرہند میں ایٹمی ہتھیاروں کے پھیلاؤ کا باعث ہے، شاہ محمود

عرب نیوز کے مطابق انہوں نے لکھا ہے کہ ایک ایسے لیڈر کا وژن ہے جس نے متحدہ عرب امارات کو ترقی میں غیر معمولی مقام پر کھڑا کیا۔

ابوظبی کے ولی عہد شہزادہ محمد بن زید النہیان کا اس ضمن میں کہنا ہے کہ یہ ملک کے لیے ایک تاریخی سنگ میل ہے جو رواں سال اپنے قیام کی پچاسویں سالگرہ منا رہا ہے۔

لندن: ایٹمی حملے سے بچنے کیلئے تیار کردہ خصوصی بنکر 10 ملین پاونڈ میں فروخت

نیوکلیئر انرجی پلانٹ کے یونٹ ون کو گذشتہ سال سنہ 2020 میں نیوکلیئر ریگولیٹر نے کام کرنے کا لائسنس جاری کیا تھا۔

[ad_2]

Source link

Updated: اپریل 6, 2021 — 8:07 شام

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

BFT News © 2022 Frontier Theme