شدید گرمی میں ٹھنڈی ڈرنک نے جان لے لی – ہم نیوز

[ad_1]

چین میں شدید گرمی کے دوران ٹھنڈی سافٹ ڈرنک پینے سے شہری کی موت ہو گئی۔

برطانوی اخبار ڈیلی میل کی رپورٹ کے مطابق چین میں 22 سالہ نوجوان دس منٹ میں ڈیڑھ لیٹر بوتل پینے کے بعد جسم میں گیس بھرنے سے 18 گھنٹے میں انتقال کرگیا۔

ڈیلی میل کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ نوجوان شہری نے دس منٹ میں کوک کی بوتل پی لی جس نے اس کے جسم میں خطرناک حد تک گیس بھر دی، جس وجہ سے اس کے جگر کو آکسیجن ملنا مشکل ہو گیا۔

رپورٹ کے مطابق  شہری کوک پینے کے 6 گھنٹے بعد شدید درد اور سوجن پیٹ کی شکایت کے ساتھ اسپتال پہنچا، لیکن اس کی جان بچائی نہ جا سکی۔

ڈاکڑز کا کہنا ہے کہ شہری کو پہلے سے کوئی مسئلہ لاحق نہیں تھا، لیکن جب وہ اسپتال لایا گیا تو اس کی دھڑکن تیز، لو بلڈ پریشر، اور سانس کا مسئلہ درپیش تھا۔

سی ٹی اسکین میں بھی شہری کی آنتوں میں گیس دکھائی دی۔

جگر کی بچانے کے لیے کئی ادویات بھی دی گئیں، لیکن 12 گھنٹوں بعد آنے والی بلڈ ٹیسٹ کی رپورٹس سے معلوم ہوا کہ شہری کا جگر بری طرح متاثر ہو چکا ہے اور وہ 18 گھنٹوں بعد جان کی بازی ہار گیا۔

تاہم برطانوی بائیو کیمسٹ کے پروفیسر نے کولڈ ڈرنک سے موت ہونے کی وجہ کو بے بنیاد قرار دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ موت کی وجہ جاننے کے لیے مزید رپورٹس کی ضرورت ہے۔ ان کا ماننا ہے کہ موت کا سبب بیکٹیریل انفیکشن ہو سکتا ہے جو جسم کے اندر جا کر گیس بننے کا سبب بنا۔

انہوں نے کہا کہ عام طور پر اس قسم کی حالت بیکٹیریا کی وجہ سے ہوتی ہے گیس کی صورت میں معدے سے راستہ بنا کر آنتوں میں جا کر جسم کے دوسرے جڑے حصوں میں خطرناک حد تک پھیل جاتی ہے۔

[ad_2]

Source link

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

BFT News © 2022 Frontier Theme