بشیر میمن کے بیان پر مریم نواز کا انکوائری کا مطالبہ درست ہے، اعتزاز احسن

[ad_1]

پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما اور ممتاز قانون دان اعتزاز احسن نے کہا ہے کہ  وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے) کے سابق سربراہ بشیر میمن کے بیان سے زیادہ فائدہ شریف خاندان کو ہوتا ہے۔ مریم نواز کی یہ بات درست ہے کہ اس معاملے پر اعلیٰ سطح کی انکوائری ہونی چاہیے۔

پروگرام پاکستان ٹونائٹ میں گفتگو کرتے ہوئے اعتزاز احسن نے کہا کہ مریم نواز نے پہلے بھی ایک جج کا آڈیو ٹیپ پیش کیا تھا۔ میں نے اُس ٹیپ پر کہا تھا کہ اگر یہ درست ہے تو نواز شریف باہر آسکتے ہیں۔

رہنما پیپلز پارٹی اعتزاز احسن نے کہا کہ اگر ن لیگ والے خود بشیرمیمن پر استغاثہ کرتے ہیں تو سمجھوں گا کہ یہ سنجیدہ ہیں۔ مسلم لیگ ن پر منصر ہے کہ وہ اس بیان کوعدالت میں پیش کرے۔ میرا تجربہ یہ ہے کہ اس طرح کا بیان صرف رٹا لگایا ہوا ہوتا ہے۔

مزید پڑھیں: شہزاد اکبر کا بشیر میمن کو 50 کروڑ کا ہرجانے کا نوٹس

اعتزاز احسن نے کہا مریم نواز نے کہا کہ وزیراعظم ہاوَس میں اس طرح پہلے کبھی نہیں ہوا۔ ماضی میں وزیراعظم ہاوَس میں بہت کچھ ہوا ہے اور سپریم کورٹ پر حملے کی منصوبہ بندی بھی ہوئی۔

انہوں نے کہا کہ احتساب عدالت کے سابق جج مرحوم ارشد ملک ٹیپ کے بعد ن لیگ نے کارروائی آگے بڑھانے سے گریز کیا تھا۔ مجھے لگتا ہے کہ مسلم لیگ ن اب بھی گریز کرے گی۔

اعتزاز احسن نے کہا کہ میں نہیں سمجھتا کہ پیپلز پارٹی کا پاکستان ڈیموکریٹک مومنٹ کیساتھ دوبارہ کوئی تعاون ہوسکتا ہے۔ لانگ مارچ اس طرح نہیں ہوتا کہ آپ ایک دن میں کال دے دیں۔ پیپلز پارٹی معافی نہیں مانگ سکتی۔ پی ڈی ایم سے متعلق رائے پارٹی اجلاس میں دوں گا۔

پروگرام پاکستان ٹونائٹ میں گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے کہا کہ صرف ان بچوں کو امتحان دینے کی گنجائش دی گئی جن کی مجبوری ہے۔50 سے زیادہ بچے امتحانی ہال میں نہیں بیٹھیں گے۔

وفاقی وزیر تعلیم نے کہا کہ امتحانی کے بغیر پاس کرنا ممکن نہیں۔ صوبائی وزرائے تعلیم کی بھی یہی رائے ہے کہ بغیر امتحان کے پاس نہیں کیا جائے گا۔

[ad_2]

Source link

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

BFT News © 2022 Frontier Theme