بل گیٹس اور میلنڈا گیٹس کے درمیان طلاق کی ممکنہ وجہ سامنے آگئی

[ad_1]

مائکروسافٹ کے بانی بل گیٹس اور ان کی اہلیہ میلنڈا کے درمیان طلاق کا فیصلہ اچانک نہیں ہوا۔ میلنڈا گیٹس کی مائیکروسافٹ کے بانی اور دنیا کے امیر ترین افراد میں سے ایک بل گیٹس سے طلاق کے فیصلے کی ممکنہ وجہ ان کے سابق شوہر کی جنسی اسکینڈل میں بدنام جیفری ایپسٹین سے ملاقاتیں تھیں۔

امریکی اخبار وال سٹریٹ جرنل کے مطابق میلنڈا نے 2019 ہی میں طلاق کے لیے وکیلوں سے رابطہ شروع کر دیا تھا۔

یاد رہے کہ اس جوڑے نے گذشتہ ہفتے ایک بیان جاری کیا تھا، جس میں کہا گیا تھا کہ دونوں نے شادی کے 27 سال بعد الگ ہونے کا فیصلہ کر لیا ہے۔

انڈیپنڈنٹ اردو کے مطابق اس طلاق کے بعد پاکستان سمیت دنیا بھر کے سوشل میڈیا پر بحث شروع ہو گئی تھی کہ آیا اس طلاق کی کیا وجہ ہو سکتی ہے تاہم میلنڈا گیٹس کی بل گیٹس سے طلاق کے فیصلے کی ممکنہ وجہ بل گیٹس کی جیفری ایپسٹین سے ملاقاتیں تھیں۔

مزید پڑھیں: میاں بیوی اور وہ؟ بل گیٹس کی طلاق کے پیچھے کون ؟

جیفری ایپسٹین امریکی سرمایہ کار تھے جنہیں 2019 میں جنسی جرائم کی وجہ سے سزا ہوئی تھی اور انہوں نے جیل ہی میں خودکشی کرلی تھی۔ فردِ جرم کے مطابق ایپسٹین نے درجنوں کم عمر لڑکیوں کا ریپ کیا تھا۔

ایپسٹین کے متعدد اہم شخصیات سے تعلقات تھے، جن میں سابق صدور ٹرمپ اور بل کلنٹن اور برطانوی شہزادہ اینڈریو کے علاوہ متعدد نوبیل انعام یافتہ شخصیات شامل ہیں۔

بل گیٹس نے 2019 میں ایپسٹین کے مرنے کے بعد ایک بیان میں اعتراف کیا تھا کہ وہ ان سے ملتے رہے ہیں لیکن اس پر پچھتاوے کا اظہار کرتے ہوئے انہوں نے اسے ’فیصلے کی غلطی‘ قرار دیا تھا۔

ایک بیان میں گیٹس کے ترجمان نے کہا تھا کہ ’اگرچہ ایپسٹین بری طرح سے گیٹس کے پیچھے پڑے ہوئے تھے مگر گیٹس کی ایپسٹین کے ساتھ کسی قسم کی کوئی شراکت داری یا دوستی نہیں تھی۔‘ بیان میں یہ بھی لکھا تھا کہ گیٹس نے کبھی ایپسٹین کی پارٹیوں میں شرکت نہیں کی۔

[ad_2]

Source link

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

BFT News © 2022 Frontier Theme