آکسیجن پر نازک حالت مریضوں کی کل تعداد 5360 تک پہنچ گئی، اسد عمر

[ad_1]

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) کے سربراہ اور وزیر منصوبہ بندی اسد عمر کا کہنا ہے کہ عالمی وباء کورونا وائرس کا چیلنج ختم نہیں ہوا بلکہ بیماری کے پھیلاؤ میں اضافہ جاری ہے۔

اسد عمرنے ٹویٹر پر بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ کورونا سے بچاؤ کیلئے احتیاط اور ایس او پیز پر عمل کرنا  ضروری ہے، اگلے کچھ ہفتے مشکل ہیں۔

اسد عمر نے کہا کہ اگر ہم بیماری کو تیزی سے پھیلنے دیں تو کوئی سسٹم مقابلہ نہیں کرسکتا۔

 وفاقی وزیر نے مزید بتایا کہ آکسیجن پر نازک حالت  مریضوں کی کل تعداد 5360 تک پہنچ گئی ہے، یہ پچھلے  سال  جون سے 57فیصد  زیادہ ہے۔

اسد عمر نے کہا کہ کورونا کے مریضوں کی تعداد بڑھنے کے باوجود آکسیجن لے کر بستروں تک ہر شے دستیاب رہی۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان میں گذشتہ سال آکسیجن کی پیداواری صلاحیت 487 ٹن یومیہ تھی جسے  بڑھا کر 798 ٹن کردیا گیا ہے۔

اسد عمر نے کہا کہ کل این سی او سی  کے اجلاس میں  6000 ٹن آکسیجن ، 5000 سلنڈر اور 20 کریوجنک ٹینک درآمد کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے، یہ فیصلہ احتیاطی تدابیر کی بنیاد پر کیا گیا۔

[ad_2]

Source link

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

BFT News © 2022 Frontier Theme